پشاور ؛ جامعہ عارف حسینی میں دھماکہ,علامہ عارف حسینی کے پوتے سمیت ۱۴ افراد شہید

پشاور میں قائم جامعۃ الشہید عارف الحسینی کے احاطے میں واقع جامع مسجد میں نماز جمعہ سے کچھ دیر قبل خودکش دھماکہ میں شہید علامہ عارف حسینی کے پوتے سمیت ۱۵ افراد کے شہید ہونے کی اطلاع موصول ہوئی ہے۔

330412_mپشاور کے علاقے فیصل کالونی میں قائم جامعۃ الشہید عارف الحسینی کے احاطے میں واقع جامع مسجد میں نماز جمعہ سے کچھ دیر قبل خودکش دھماکہ ہوا، جس میں آخری اطلاع کے مطابق ۱۵ افراد جاں بحق جبکہ ۲۷ کے لگ بھگ زخمی ہوئے ہیں۔

اطلاعات کے مطابق شہید ہونے والوں میں علامہ عارف حسین حسینی کے پوتے بھی شامل ہیں۔ تفصیلات کے مطابق پشاور میں جی ٹی روڈ پر واقع جامعۃ الشہید عارف الحسینی کے احاطے میں واقع جامع مسجد میں نماز جمعہ سے کچھ دیر پہلے دھماکہ ہوا، عینی شاہدین کے مطابق دھماکے سے قبل دو مسلح افراد نے گیٹ پر موجود سکیورٹی گارڈ کو گولی مار کر اندر داخل ہونے میں کامیابی حاصل کی۔
خودکش حملہ آور فوری طوری پر مسجد میں داخل ہوا اور خود کو دھماکے سے اڑا دیا۔ اطلاعات ہیں کہ مسلح افراد نے مدرسے کے احاطے میں بھی کئی افراد کو نشانہ بنایا، تاہم وہ بچ گئے۔
1017117_188909311269965_1715545036_nواضح رہے کہ موسم گرما کی چھٹیاں ہونے کے باعث مدرسے کے اساتذہ، مسئولین اور طلباء موقع پر موجود نہ تھے، جبکہ دھماکہ خطبوں اور نماز جمعہ سے پہلے ہونے کی وجہ سے امام جمعہ والجماعت علامہ عابد حسین شاکری بھی اس حملے میں محفوظ رہے۔
دیگر ذرائع کے مطابق دھماکے کے وقت مسجد میں پچاس کے قریب افراد موجود تھے۔ ایک اور عینی شاہد نے میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ خودکش حملہ آور کالے رنگ کے کپڑوں میں ملبوس تھا۔ خودکش حملہ آور کی عمر بیس سے بائیس سال تھی۔ عینی شاہد کا مزید کہنا تھا کہ وہ خودکش حملہ آور کے پیچھے ہی تھا، اسی دوران حملہ آور نے گیٹ پر کھڑے سکیورٹی اہلکار کو گولیاں مار کر جاں بحق کرنے کے بعد مسجد کے اندر داخل ہو کر خود کو زوردار دھماکے سے اڑا لیا۔ دھماکے میں جاں بحق اور زخمی ہونے والے افراد کو لیڈی ریڈنگ اسپتال منتقل کر دیا گیا ہے۔ دھماکے سے مدرسے کو بھی شدید نقصان پہنچا ہے۔ دھماکے کے بعد سکیورٹی فورسز نے جائے وقوعہ پر پہنچ کر علاقے کو گھیرے میں لے لیا۔